اسلامی جمعیت طلبہ کے زیر اہتمام اسلامیہ کالج پشاور میں سید طفیل الرحمن شہید سٹوڈنٹس فیسٹول کا آغاز

اسلامی جمعیت طلبہ کے زیر اہتمام اسلامیہ کالج پشاور میں سید طفیل الرحمن شہید سٹوڈنٹس فیسٹول کا آغاز
تین روز فیسٹول کے پہلے دن کا افتتاح خیبر میڈیکل کالج کے ڈین ڈاکٹر نورالایمان نے کیا۔
پشاور (کیمپس رپورٹر) اسلامیہ کالج یونیورسٹی پشاور میں اسلامی جمعیت طلبہ کے زیر اہتمام تین روزہ سید طفیل الرحمن شہید سٹوڈنٹس فیسٹول کاآغاز ہوگیا جس کے پہلے روز کا افتتاح خیبر میڈیکل کالج کے ڈین ڈاکٹر نورالایمان اور ناظم صوبہ خیبر پختونخوا شکیل احمد نے کیا۔ اس موقع پر صوبائی اسمبلی سیکرٹریٹ کے ترجمان ڈاکٹر زاہد شاہ، اسلامی جمعیت طلبہ یونیورسٹی کیمپس پشاور کے ناظم اول شیر خان اور ناظم اسلامیہ کالج سلمان بن احسان بھی موجود تھے۔ سید طفیل الرحمن شہید سٹوڈنٹس فیسٹول کے پہلے دن سیرت البنی ﷺ کوئز مقابلہ کا انعقاد کیا گیا جس میں چار سو سے زائد طلبہ و طالبات نے شرکت کی۔ سیرت البنی کوئز مقابلہ میں شعبہ پولیٹیکل سائنس جامعہ پشاور کے طالب علم نے صہیب نے پہلی،یونیورسٹی آف انجئنیرنگ اینڈ ٹیکنالوجی شعبہ کیمیکل سائنسزکے محمد یوسف نے دوسری اور جامعہ پشاور شعبہ جیالوجی کے محمد وقار نے تیسری پوزیشن حاصل کی۔ ناظم صوبہ شکیل احمد نے ٹاب ٹونٹی پوزیشن ہولڈرز میں انعامات جبکہ پہلی،دوسری اور تیسری پوزیشن ہولڈرز میں بالترتیب 30ہزاز،25ہزار،10ہزار روپے کے چیک تقسیم کیں۔اس موقع پر طلبہ سے خطاب کرتے ہوئے ڈاکٹر زاہد شاہ نے بنی کریم ﷺ کی زندگی کے مختلف گوشوں پر روشنی ڈالتے ہوئے کہا کہ آپ ﷺکی زندگی ہمارے لئے مشعل راہ ہے اور آپ کی تعلیمات پر عمل کرنے سے مسلمانوں کی زندگی سنور سکتی ہے اور موجودہ مسائل سے مکمل طور پر چھٹکارہ حاصل کرسکتے ہیں۔اس موقع پر طلبہ سے خطاب کرتے ہوئے ناظم صوبہ شکیل احمدنے کہا کہ اس طرح کے تعلیمی میلے طلبہ کی نشوونما اور تربیت میں اہم کردار ادا کرتے ہیں اور طلبہ کی پڑھائی میں دلچسپی بڑھانے کا باعث بنتے ہیں۔ناظم صوبہ نے کہا کہ ایک طرف اسلامی جمعیت طلبہ تعلیمی اداروں میں طلبہ کو تعلیم،اسلام اور نظریہ پاکستان سے جوڑنے اور ان کی تربیت کے لئے اس طرح کے پروگرامات منعقد کرتی ہے تو دوسری طرف لسانی پرست طلبہ تنظیمیں مسلسل جمعیت کے پروگرامات کو نشانہ بنا رہی ہے اور حال ہی میں ان لسانی تنظیموں کے اسلحہ بردار افراد نے اسلامک انٹرنیشنل یونیورسٹی اسلام آباد میں جمعیت کے پروگرام کو نشانہ بنا کر جمعیت کے ایک امیدوار رکن طفیل الرحمن کو شہید جبکہ پندرہ سے زائد کارکنا ن جمعیت کو شدید زخمی کیا ہے۔انھوں نے کہا کہ یہ فیسٹول بھی ان لسانی تنظیموں کے تشدد کا نشانہ بننے والے سید طفیل الرحمن شہید کے نام سے منسوب کیا گیا ہے۔اس موقع پر ناظم یونیورسٹی کیمپس اول شیر خان نے بھی خطاب کیا اور مہمانان کا شکریہ ادا کیا۔علاوہ ازیں فیسٹول میں کتب میلہ کا بھی انعقاد کیا گیا ہے جو تین دن تک اسلامیہ کالجیٹ گروانڈ میں جاری رہیگا۔ جس میں ملک بھر سے 80 سے زائد اکیڈمیز،ادارے،پبلشرزاور بک سیلزز شرکت کرینگے اور طلبہ صبح نو بجے سے شام پانچ بجے تک دس سے پچاس فیصد رعایتی نرخوں پر کتب خرید سکیں گے۔فیسٹول میں مختلف کلچر اور فوڈ سٹالز بھی لگائے گئے ہیں۔ فیسٹول کے دوسرے دن انعام گھر اور موجودہ ملکی صورت حال و طلبہ یونین پر ٹی ٹاک شوز کا انعقاد کیا جائے گا۔

By | 2019-12-19T00:17:28+00:00 December 19th, 2019|Latest News|0 Comments

Leave A Comment